Headlines

کس پچھتاوے میں تڑپ رہے ہیں ارجن کپور؟ ملائیکہ اروڑہ سے بریک اپ کی خبر کے درمیان اداکار نے لکھی درد بھری پوسٹ

کس پچھتاوے میں تڑپ رہے ہیں ارجن کپور؟ ملائیکہ اروڑہ سے بریک اپ کی خبر کے درمیان اداکار نے لکھی درد بھری پوسٹ

انسٹاگرام اسٹوریز پر پوسٹ کرتے ہوئے ارجن کپور نے لکھا کہ ’پچھتاوے کے درد سے ڈسپلن کا درد زیادہ بہتر ہے‘۔ اس پوسٹ کے بعد کہا جا رہا ہے کہ انہوں نے ملائیکہ سے اپنا رشتہ ختم کر لیا ہے۔

نئی دہلی : ارجن کپور گزشتہ سات سالوں سے ملائیکہ اروڑہ کو ڈیٹ کر رہے ہیں۔ حالانکہ گزشتہ ایک سال سے اس جوڑے کے بریک اپ اور علاحدگی کی خبریں گردش کر رہی ہیں۔ حال ہی میں 26 جون کو ارجن نے اپنی 39 ویں سالگرہ منائی۔ ان کی سالگرہ کی تقریب میں بالی ووڈ کے کئی ستارے نظر آئے۔ تاہم اس عرصے کے دوران دیرینہ گرل فرینڈ ملائیکہ اروڑہ کا کوئی پتہ نہیں تھا۔ ایسے میں ان کے بریک اپ کی خبر کو مزید ہوا مل گئی ہے۔ اب بریک اپ کی قیاس آرائیوں کے درمیان ارجن نے ایک کرپٹک نوٹ پوسٹ شیئر کیا ہے۔

انسٹاگرام اسٹوریز پر پوسٹ کرتے ہوئے ارجن کپور نے لکھا کہ ’پچھتاوے کے درد سے ڈسپلن کا درد زیادہ بہتر ہے‘۔ اس پوسٹ کے بعد کہا جا رہا ہے کہ انہوں نے ملائیکہ سے اپنا رشتہ ختم کر لیا ہے۔ بتادیں کہ ارجن سے پہلے ملائیکہ نے بھی اپنے انسٹاگرام اسٹوری پر ایک کرپٹک نوٹ شیئر کرکے مداحوں کی قیاس آرائیوں پر ردعمل ظاہر کیا تھا۔

پوسٹ میں لکھا ہے کہ ہمیشہ کچھ ایسا ہوتا ہے جس کا انتظار کیا جاسکتا ہے، کچھ ایسا جس کے لئے شکرگزار ہونا چاہئے، کچھ ایسا جس پر فخر ہونا چاہئے، کچھ ایسا جسے تھامے رکھنا چاہئے، کچھ ایسا جس پر یقین کرنا چاہئے، کچھ ایسا جس سے پیار کرنا چاہئے، کچھ ایسا جس کے لئے جینا چاہئے۔ زندگی میں بہت کچھ ہے ۔

32 thoughts on “کس پچھتاوے میں تڑپ رہے ہیں ارجن کپور؟ ملائیکہ اروڑہ سے بریک اپ کی خبر کے درمیان اداکار نے لکھی درد بھری پوسٹ

  1. online canadian drugstore [url=https://canadapharmast.com/#]canadian discount pharmacy[/url] best canadian pharmacy online

  2. best online pharmacy india [url=http://indiapharmast.com/#]india online pharmacy[/url] reputable indian online pharmacy

  3. mail order pharmacy india [url=https://indiapharmast.com/#]indian pharmacies safe[/url] buy prescription drugs from india

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *